Announcement

Collapse
No announcement yet.

میں بہادر ہوں مگر ہارے ہوئے لشکر میں ہوں

Collapse
X
  • Filter
  • Time
  • Show
Clear All
new posts

  • میں بہادر ہوں مگر ہارے ہوئے لشکر میں ہوں

    رات دن محبوس اپنے ظاہری پیکر میں ہوں
    شعلۂ مضطر ہوں میں لیکن ابھی پتھر میں ہوں

    اپنی سوچوں سے نکلنا بھی مجھے دشوار ہے
    دیکھ میں کس بے کسی کے گنبد بے در میں ہوں

    دیکھتے ہیں سب مگر کوئی مجھے پڑھتا نہیں
    گزرے وقتوں کی عبارت ہوں عجائب گھر میں ہوں

    تجھ کو اتنا کچھ بنانے میں مرا بھی ہاتھ ہے
    میری جانب دیکھ میں بھی تیرے پس منظر میں ہوں

    میرا دکھ یہ ہے میں اپنے ساتھیوں جیسا نہیں
    میں بہادر ہوں مگر ہارے ہوئے لشکر میں ہوں

    کون میرا پوجنے والا ہے جو آگے بڑھے
    میں اکیلا دیوتا جلتے ہوئے مندر میں ہوں


    ریاض مجید
    :(

  • #2
    What a beautiful ghazl Amazing Job. Keep up the outstanding work.


    Comment

    Unconfigured Ad Widget

    Collapse

    Unconfigured Ad Widget

    Collapse

    pegham Youtube Channel

    Collapse

    Working...
    X