Announcement

Collapse

Important Information

Assalamo Allaikum

Pegham is being relocated from it's current hosts to another host. This will disrupt services, until the new setup is ready.

The new setup will be a changed one: A new face and a new site, with forum as it is. So stay tuned and see the new site.

Admin
See more
See less

Ashfaq Ahmed Quotes - اشفاق احمد کے اقوال

Collapse
X
  • Filter
  • Time
  • Show
Clear All
new posts

  • Ashfaq Ahmed Quotes - اشفاق احمد کے اقوال

    Ashfaq Ahmed Quotes - اشفاق احمد کے اقوال



    جب زندہ آدمی کا اندر مر جاتا ہے ، تو وہ بڑا خوش اخلاق اور شائستہ ہو جاتا ہے اور شمع زندگی کے پروانے اس سے نور حاصل کرنے کے لیے دور دور سے اُڑ کر آنے لگتے ہیں ---

    اشفاق احمد

  • #2
    لفظوں کے دانت نہیں ہوتے مگر یہ کاٹ لیتے ہیں ۔۔۔

    اشفاق احمد

    Comment


    • #3
      بارش کے دنوں میں باہر بوندیں پڑتی ہیں ۔۔۔۔ تو انسان کے اندر بھی بارش ہونے لگتی ہے ۔۔۔۔ اوپر سے تو ٹھیک ریتا ہو ، لیکن اندر سے بلکل بھیگ جاتا ہے ۔۔۔۔

      اشفاق احمد

      Comment


      • #4
        زندگی کا مقصد زمہ داری ہے --- اور سب سے بڑی زمہ داری الله کے ہاتھ میں ہاتھ دینا ہے ---

        اشفاق حمد
        من چلے کا سودا

        Comment


        • #5
          سکون کے دروازے پر بھکاری کی طرح کبھی نہ جانا ، بادشاہ کی طرح جانا ۔۔۔۔ جھومتے جھامتے دیتے بکھیرتے ۔۔۔۔ کیا تم کو معلوم نہیں کہ بھکاریوں پر ہر دروازہ بند ہو جاتا ہے ۔۔۔

          اشفاق احمد

          Comment


          • #6
            وہ محبت ہی نہیں جو اُداس نہ کرے ۔۔۔۔۔

            اشفاق احمد

            Comment


            • #7
              جوگ کا پہلا قدم تب اُٹھے گا جب غصے کو ختم کرے گا ۔۔۔ غرور تکبر راکھ بنا کر حکم حکومت داؤ پر لگا دے گا ۔۔۔ یہ رنگ اتار پھینک ' پھر جوگ کی سوچنا ۔۔۔

              اشفاق احمد
              (من چلے کا سودا)

              Comment


              • #8
                اکثر لوگوں میں تکبر ہوتا ہے ، مگر اُن کا نفس اُن کو پتا نہیں چلنے دیتا ۔۔۔

                اشفاق احمد
                ( بابا صاحبا )

                Comment


                • #9
                  جس شخص نے آپ کا کوئی قصور کیا ہو ، اُس کو فوراً معاف کر کے آزاد کر دیں ۔۔۔ جب تک آپ اسے معاف نہیں کریں گے ، وہ قصور میں جکڑا رہے گا اور آزادی سے دور رہے گا ۔۔۔۔ یاد رکھیے جکڑے ہوئے شخص پر شیطان فوری حملہ کرتا ہے ۔۔۔

                  اشفاق احمد
                  بابا صاحبا

                  Comment


                  • #10
                    اشفاق احمد لِکھتے ہیں اٹلی میں میرا ٹریفک چالان ہوا مصروفیت کی وجہ چالان فیس وقت پر ادا نہ کر سکا..
                    کورٹ جانا پڑا جج کے سامنے پیش ہوا تو اس نے وجہ پوچھی...
                    میں نے کہا_ ٹیچر ہوں کچھ مصروف رہا
                    اس سے پہلے کے میں بات پوری کرتا جج نے کہا..
                    اے ٹیچر اِز اِن دا کورٹ ( کورٹ میں ایک استاد ہے) اور سب لوگ کھڑے ہو گئے جج سمیت میرا چالان بھی معاف
                    کیا اور معافی بھی مانگی...
                    اُس روز میں نے اُس قوم کی ترقی کا راز جان لِیا ...

                    Comment


                    • #11
                      سن بابو لوکا!
                      تو اس کو ڈھونڈنے اور کھوج پانے کے لیے کہاں چلا گیا، کدھر کو نکل گیا؟
                      اس کو ڈھونڈنے اور اسے پانے کے لیے کوئی راستہ نہیں ہے۔ راستے تو دور جانے کے لیے ہوتے ہیں۔۔۔ سفر تو کرنے اور منزلیں طے کرنے لیے ہوتے ہیں۔ یہاں سے تو کہیں جانا ہی نہیں۔۔۔ کہیں پہنچنا ہی نہیں، پھر راستہ کیسا؟ اسے پانے اور اسے کھوجنے کے لیے تو ہمیں اپنے اندر اترنا ہے۔۔۔ اپنے وجود میں ڈھونڈنا ہے۔
                      بابو لوکا! اپنی شہ رگ کے ساتھ تلاش کرنا ہے۔۔۔ اور جب اپنی شہ رگ کے پاس پہنچ گئے تو پھر وہاں موجاں ہی موجاں۔۔۔ میلے ہی میلے۔
                      بڑی دور چلا گیا ہے بابو لوکا! پر میری بات سن لے کہ اصل میں کوئی راستہ وہاں نہیں جاتا۔۔۔ اس تک نہیں لے جاتا۔ وجہ یہ ہے بابو لوکا کہ وہ وہاں نہیں (گلے کے نیچے ہاتھ لگا کر) یہاں ہے۔ اور یہاں کے لیے کوئی راستہ نہیں۔۔۔ کوئی پگڈنڈی نہیں۔ بس اندر اترنا ہے۔۔۔ اپنے اندر دیکھنا ہے۔۔۔ اندر جھات ڈالنی ہے کہ کوئی گند بلا تو نہیں۔۔۔ کوڑا کرکٹ تو نہیں؟ شہ رگ کے تخت طاؤس کے نیڑے نیڑے۔۔۔۔ شرک، منافقت تو نہیں اندر۔۔۔ بس پھر ستے ای خیراں۔
                      من چلے کا سودا
                      اشفاق احمد

                      Comment


                      • #12


                        نماز کی قضا ہے ، لیکن خدمت کی قضا نہیں ۔۔۔

                        اشفاق احمد
                        (زاویہ)

                        Comment


                        • #13


                          جب زندہ آدمی کا اندر مر جاتا ہے ، تو وہ بڑا خوش اخلاق اور شائستہ ہو جاتا ہے اور شمع زندگی کے پروانے اس سے نور حاصل کرنے کے لیے دور دور سے اُڑ کر آنے لگتے ہیں ---

                          اشفاق احمد

                          Comment


                          • #14


                            بارش کے دنوں میں باہر بوندیں پڑتی ہیں ۔۔۔۔ تو انسان کے اندر بھی بارش ہونے لگتی ہے ۔۔۔۔ اوپر سے تو ٹھیک ریتا ہو ، لیکن اندر سے بلکل بھیگ جاتا ہے ۔۔۔۔

                            اشفاق احمد

                            Comment


                            • #15


                              زندگی کا مقصد زمہ داری ہے --- اور سب سے بڑی زمہ داری الله کے ہاتھ میں ہاتھ دینا ہے ---

                              اشفاق حمد
                              من چلے کا سودا

                              Comment

                              Working...
                              X